Between Two Village Girls - دو دیہاتی لڑکیوں کے درمیان

Bushra: Assalamo Alaikim, Salma. بشریٰ: السلام و علیکم سلمیٰ۔
 
Salma: Walaikum Assalam, Bushra. How are you? سلمیٰ: و علیکم السلام۔ بشریٰ کیا حال ہے؟
 
Bushra: I am all right by the grace of God. How are you? بشریٰ: خدا کا بڑا شکر ہے۔ آپ سنائیں۔
 
Salma: I am also well. سلمیٰ: میں بھی راضی خوشی ہوں۔
 
Bushra: So sophisticated, where are you going today? بشریٰ: آج تم اتنی بن سنور کر کہاں جا رہی ہو؟
 
Salma: To attend the wedding of Lubna. سلمیٰ: لبنیٰ کے بیاہ پر جا رہی ہوں۔
 
Bushra: But your make-up and fashion are not good. بشریٰ: لیکن تمہاری سرخی پوڈر اور فیشن ٹھیک نہیں لگ رہا۔
 
Salma: I was in a hurry. So I could not make much preparations. سلمیٰ: مجھے بہت جلدی تھی اس لئے میں تیاری نہ کر سکی۔
 
Bushra: How were you busy? بشریٰ: کیا مصروفیت تھی؟
 
Salma: I had to cut the fodder for bufflaoes and goats because my brother is not home. سلمیٰ: مجھے بھینسو ں اور بکریوں کے لئےچارہ کاٹنا تھا، کیونکہ میرا بھائی گھر پر نہیں ہے۔
 
Bushra: But it does not take much time. بشریٰ: لیکن اس پر تو زیادہ وقت نہیں لگتا۔
 
Salma: I had also to do like making dung-cakes, mixing in the manger, cutting the cane, cleaning the dishes and what not. سلمیٰ: مجھے دوسرے گھریلو کام بھی کرنا تھے۔ جیسے اوپلے تھاپنا، مویشیوں کا دودھ دوھنا، گتاواکرنا، باڑکاٹنا،برتن دھونا اور پتہ نہیں کیاکیا۔
 
Bushra: Oh! this is what makes you late. بشریٰ: اچھا تو اس وجہ سے تمہیں دیر ہوئی۔
 
Salma: Yes, now Lubna's baraat may be reaching soon. سلمیٰ: ہاں۔ لبنیٰ کی بارات اب آنےہی والی ہو گی۔
 
Bushra: You can leave now, I have also to wash the clothes at the pond. بشریٰ: اب تم جاؤ، مجھے بھی جوہڑ پر کپڑے دھونے جانا ہے۔